5دسمبر سے ایس او پیز پر عملدرآمد کا ہفتہ منانے کا اعلان

ویب ڈیسک
0 0
Read Time:3 Minute, 15 Second

وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے آئندہ ہفتے کو کوروناسے بچاؤ کے لیے ایس او پیز پر عملدرآمد کا ہفتہ منانے کا اعلان کیا ہے۔

وزیر داخلہ بریگیڈیئر ریٹائرڈ اعجاز شاہ کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ وزیر داخلہ اعجاز شاہ نے جن احتیاطی تدابیر کا ذکر کیا وہ بہت آسان ہیں اور میں پھر دہرا دیتا ہوں جس میں ماسک کا استعمال، تھوڑا یعنی 6فٹ کا فاصلہ، ہجوم والی جگہ سے اجتناب اور ہر دھونا شامل ہیں، یہ وہ تمام چیزیں ہیں جن کو اپنانا ضروری ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہماری تجویز ہے کہ یہ جو موجودہ ہفتہ 5 سے 12 دسمبر کے دوران آ رہا ہے اس کو ہم اس چیز کے لیے مختص کردیں، ایس او پیز پر عملدرآمد یقینی بنانے کے لیے ہفتہ صفائی کی طرح اس ہفتے کا پورا استعمال کرتے ہوئے ایس او پیز پر مکمل عمل کیا جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ تمام صوبوں اور وفاقی اکائیوں سے ہمارے رابطے ہیں اور ہم چاہیں گے کہ وہ اس ہفتے میں ایس او پیز پر عملدرآمد یقینی بنانے کے لیے اپنی طاقت اور صلاحیتوں کا مظاہرہ کریں۔

ڈاکٹر فیصل سلطان نے عوام سے اپیل کی کہ اس بیماری کی کمر توڑنے کے لیے ہمیں اگر تھوڑی سی محنت، قربانی اور احتیاط کر لیں تو جو قیمتی جانیں ہمیں ضائع ہوتی نظر آرہی ہیں ہم انہیں روکنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔

انہوں نے بتایا کہ کورونا کی دوسری لہر پورے ملک میں اپنا اثر دکھا رہی ہے اور بدقسمتی سے گزشتہ 24گھنٹے میں 75 لوگوں کی کورونا سے موت ہوئی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ ہمارے نظام صحت پر شدید دباؤ آ سکتا ہے، کچھ دباؤ آ رہا ہے لیکن ناصرف ہم پر دباؤ آ رہا ہے بلکہ اس سے قیمتی جانیں بھی ضائع ہو رہی ہیں۔

اس سے قبل وزیر داخلہ بریگیڈیئر ریٹائرڈ اعجاز شاہ نے کہا کہ ہمیں چاہیے کہ ہم اپنے بزرگوں، دوستوں اور رشتے داروں سے ان ایس او پیز پر سختی سے عمل کروائیں۔

انہوں نے صوبوں کی انتظامیہ سے درخواست کی کہ وہ کوشش کریں کہ ہم ایس او پیز پر عملدرآمد کا اگلا ہفتہ صحیح طریقے سے منا سکیں۔

واضح رہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال دن بدن تشویشناک ہوتی جارہی ہے اور مسلسل 2 روز سے اموات میں اچانک تیزی سے اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں حالیہ مہینوں کی ریکارڈ 75 اموات ہوئیں جو اس عالمی وبا کی دوسری لہر کی تیزی کو ظاہر کر رہی ہیں۔

اس وقت ملک میں وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 4 لاکھ 3 ہزار 311 ہے جس میں سے 3 لاکھ 45 ہزار 365 صحتیاب ہوچکے ہیں جو 85 فیصد سے زائد ہے جبکہ 8 ہزار 166 مریضوں کا انتقال ہوا ہے۔

کورونا وائرس سے متعلق اعداد و شمار فراہم کرنے والی سرکاری ویب سائٹ کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں کورونا وائرس کے مزید 2 ہزار 829 نئے کیسز کی تصدیق ہوئی جبکہ 75 افراد وائرس کے باعث لقمہ اجل بنے۔

تاہم خوش آئند امر یہ ہے کہ 2ہزار 79 مریض صحتیاب بھی ہوگئے جس کے بعد فعال کیسز کی مجموعی تعداد 49 ہزار 780 تک جاپہنچی۔

خیال رہے کہ ملک میں اس عالمی وبا کا پہلا کیس 26 فروری 2020 کو رپورٹ ہوا تھا جو جون میں عروج پر پہنچ گیا تاہم جولائی سے کیسز میں کمی آتی گئی اور ستمبر تک بہتری کا یہ سلسلہ جاری رہا۔

اکتوبر اور خاص طور پر نومبر میں وبا کی شدت میں دوبارہ تیزی آگئی تھی اور حکومت کی جانب سے تعلیمی اداروں کی بندش کے علاوہ متعدد پابندیاں عائد کی گئی تھیں۔

جس کے بعد دسمبر کے ابتدائی 2 روز میں اموات میں کافی تیزی دیکھنے میں آئی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں ریکارڈ 75 اموات ہوئیں۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

فیس بک کی متنازع کرپٹوکرنسی کا نام بدل دیا گیا

فیس بک نے اپنی ڈیجیٹل کرنسی لبرا کا نام بدل کر ڈائم رکھ دیا ہے جس کا مقصد ادارہ جاتی خودمختاری کا دوبارہ نفاذ کرنا ہے، تا کہ اس منصوبے کے لیے ریگولیٹری منظوری حاصل کی جاسکے۔ ادارے کی جانب سے جاری بیان کے مطابق نیا نام لاطینی زبان کا لفظ ہے […]
facebook-wSD