مون سون سیزن اپنے جوبن پر، کراچی میں صبح سے تیز بارش کا سلسلہ جاری

ویب ڈیسک

کراچی میں رواں سال مون سون سیزن اپنے جوبن پر ہے اور 21 اگست سے شروع ہونے والا نیا اسپیل آج جمعرات کو بھی شہر میں صبح سے تیز اور ہلکی بارش برسا رہا ہے جسکی وجہ سے شہریوں کی مشکلات تھمتی نظر نہیں آرہیں۔

0 0
Read Time:2 Minute, 47 Second

کراچی میں رواں سال مون سون سیزن اپنے جوبن پر ہے اور 21 اگست سے شروع ہونے والا نیا اسپیل آج جمعرات کو بھی شہر میں صبح سے تیز اور ہلکی بارش برسا رہا ہے جسکی وجہ سے شہریوں کی مشکلات تھمتی نظر نہیں آرہیں۔

صبح سے صدر، ملیر، ڈیفنس، بلدیہ ٹاؤن، پی ای ایس ایچ، اسکیم 33، کلفٹن، شارع فیصل، لانڈھی، گلشن اقبال، فیڈرل بی ایریا، ماڈل کالونی، گارڈن، کورنگی سمیت دیگر علاقوں میں کہیں ہلکی تو کہیں طوفانی بارش کا سلسلہ جاری ہے۔

خیال رہے کہ 21 اگست سے جاری بارشوں کے نئے سلسلے کے باعث شہر کو پہلے ہی سیلابی صورتحال کا سامنا تھا اور 24 اگست (بروز منگل) سے برسنے والی موسلا دھار بارشوں نے شہر کی صورتحال مزید ابتر کردی ہے۔

کراچی میں بارش کی تصاویر دیکھیں

مون سون کے حالیہ سیزن نے صفائی ستھرائی اور سیوریج کے ناقص نظام میں تباہی مچا رکھی ہے جس سے شہر کے کئی علاقوں میں معمولات زندگی معطل ہیں کئی شاہراہوں پر پانی جمع ہونے کے علاوہ وہ ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں۔

شہر میں چند روز سے مسلسل بارش ہو رہی ہے— فوٹو: رائٹرز

سوہنی دھرتی اخبار کی رپورٹ کے مطابق منگل کے روز 4 افراد جاں بحق جبکہ متعدد لاپتہ ہوگئے تھے جس میں سے بدھ کے روز 5 افراد کی لاشیں ملیں اور مزید 2 افراد جاں بحق ہوئے۔

ایدھی فاؤنڈیشن نے خدشہ ظاہر کیا تھا کہ متعدد افراد اب تک لاپتہ ہیں اور شدید بارش کے باعث ان کے بچنے کے امکانات معدوم ہیں۔

جمعے کو کراچی کے علاقوں سرجانی ٹاؤن، نیو کراچی میں آبادی زیر آب آگئی تھی جہاں مکمل طور پر پانی ابھی تک نہیں نکالا جاسکا بعد ازاں منگل کو ہونے والی بارش کے نتیجے میں قائد آباد کے قریب سکھن ندی کے بند میں شگاف پڑ گئے تھے۔

جس کے سبب متعدد علاقوں میں پانی بھر گیا تھا جبکہ رزاق ٹاؤن اور مدینہ کالونی میں کئی فٹ پانی بھرنے کے علاوہ کئی مکانات بھی زمین بوس ہوگئے تھے۔

ریکارڈ توڑ بارشیں

خیال رہے کہ 25 اگست ہونے والی بارش کے بعد کراچی میں کسی ایک مقام پر اگست کے مہینے میں سب سے زیادہ بارش ہونے کا 36 سالہ ریکارڈ ٹوٹ گیا تھا۔

حکومت سندھ کے اعداد و شمار کے مطابق کراچی میں 6 جولائی کو مون سون سیزن کے آغاز سے 25 اگست بارش کے باعث مختلف حادثات میں 30 افراد لقمہ اجل بنے۔

26 اگست کو بارشوں کے سبب ہونے والے مختلف واقعات میں 7 افراد کی ہلاکت رپورٹ ہوئی۔

25 اگست کو بارش کے باعث مختلف حادثات میں 4 افراد جاں بحق ہوئے تھے جبکہ گلستان جوہر میں پہاڑی تودہ گرنے سے متعدد گاڑیاں اور موٹر سائیکلیں دب گئی تھیں۔

اس سے قبل 24 اگست کو سب سے زیادہ بارش سرجانی ٹاؤن میں ریکارڈ کی گئی تھی جہاں کئی علاقے تاحال زیر آب اور مکین سخت اذیت کا شکار ہیں، اسی دن شہر میں بارش کے باعث حادثات میں 2 افراد بھی لقمہ اجل بنے تھے۔

21 اگست کو صوبے بھر میں موسلا دھار بارشوں کے نتیجے میں کئی علاقے زیر آب جبکہ شہر قائد میں مختلف حادثات میں 2 نو عمر لڑکوں سمیت 7 افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

اس سے قبل 6 سے 9 اگست کو شہر میں وقفے وقفے سے گرج چمک کے ساتھ بارش ہوئی تھی جس میں 9 افراد لقمہ اجل بنے تھے جبکہ گزشتہ ماہ جولائی کے دوران تک شہر قائد میں مون سون کے 3 اسپیل دیکھے تھے۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

کیٹی پیری کے ہاں بیٹی کی پیدائش

امریکی پاپ اسٹار 35 سالہ کیٹی پیری کے ہاں پہلی بچی کی پیدائش ہوگئی۔
katy-perry-wSD